پاک افغان دوستی کا نیا باب شروع کریں گے، افغان صدر کی وزیراعظم اور آرمی چیف سے ملاقاتیں

اسلام آباد(خبرایجنسی)پاک افغان دوستی کا نیا باب شروع کرینگے،افغان صدر کی وزیر اعظم اور آرمی چیف سے ملاقاتیں، شاہ محمود قریشی کاکہناہےکہ دونوں ممالک مزید قریب آئینگے،دونوں ممالک کے اعلیٰ حکام کے درمیان وفود کی سطح پر بھی مذاکرات ہوئے،بعد ازاں اعلامیہ بھی جاری کیاگیاجس کے مطابق پائیدار افغان امن ثمرات کا باعث بنے گا۔تفصیلات کےمطابق وزیراعظم عمران خان اور افغان صدر اشرف غنی کے درمیان ہونے والی ون آن ون ملاقات میں دونوں ممالک کے درمیان دوستی کا نیا باب شروع کرنے پر اتفاق ہوا ۔اعلامیے کے مطابق وزیر اعظم عمران خان اور افغان صدر اشرف غنی کے درمیان ون آن ون ملاقات میں دونوں رہنمائوں نے باہمی تعلقات پر تفصلی تبادلہ خیال کیا،دونوں رہنمائوں نے اتفاق کیا کہ پائیدار افغان امن دونوں ملکوں میں ثمرات کا باعث بنے گا، ملاقات میںدونوں رہنمائوں نے دوستی اور تعاون کے نئے میثاق پر اتفاق کیا نئے میثاق کی بنیاد باہمی اعتماد ہم آہنگی اور دونوں ملکوں کی خوشحالی

ہے۔اعلامیہ میں مزید کہا گیا ہے کہ پاکستان اور افغانستان کے اعلیٰ حکام میں وفود کی سطح پر مذاکرات ہوئے پاکستانی وفد کی قیادت عمران خان اور افغان وفد کی قیادت افغان صدر اشرف غنی نے کیا۔وفود کی سطح کے مذاکرات میں آرمی چیف بھی شریک ہوئے، اس موقع پر وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ پاکستان پر امن ہمسائیگی کے ویژن پر یقین رکھتا ہے کہ وزیراعظم نے کہا کہ افغانستان میں دہائیوں سے جاری تنازعے کا حل مذاکرات میں ہے، وزیر اعظم نےکہا کہ پاکستان افغانستان کی خود مختاری اور جغرافیائی وحدت کا احترام کرتا ہے، افغان امن کے لیے انٹرا افغان ڈائیلاک کے عمل کی مکمل حمایت کرتے ہیں،دونوں رہنمائوں نے ٹرانزٹ اور باہمی تجارت میں حائل رکاوٹیں دور کرنے پر اتفاق کیا ۔ ملاقات میں وزیراعظم عمران خان نے معزز مہمان کو جنوبی ایشیاء میں امن خوشحالی اور ترقی کے لیے اپنے ویژن سے آگاہ کیا،اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ پاکستان اور افغانستان کے درمیان امن و استحکام اور خطے کی خوشحالی کے لیے تعاون پر بھی اتفاق ہوا ہے۔ اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ دونوں ملکوں کے عوام کے مفاد میں تعاون کا نیا باب کھولنے پر اتفاق کیا گیا ہے۔قبل ازیں وزیراعظم ہاوس پہنچنے پر وزیراعظم عمران خان نے افغان صدر کا استقبال کیا اور انہیں اس موقع پر گارڈ آف آنر بھی پیش کیا گیا۔افغان صدر نے وزیراعظم عمران خان سے ملاقات ہوئی جس کے دوران اہم امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔وزیراعظم سے ون آن ون ملاقات کے بعد افغانستان اور پاکستان کے درمیان وفود کی سطح پر بھی ملاقات ہوئی جس میں پاکستانی وفد کی قیادت وزیراعظم عمران خان جب کہ اشرف غنی نے افغان وفد کی قیادت کی۔وفود کی سطح پر مذاکرات میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ بھی شریک تھے۔وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور افغان صدر اشرف غنی کے درمیان بھی ملاقات ہوئی جس میں دو طرفہ تعلقات، افغان امن عمل اور باہمی دلچسپی کے امور پر بات چیت کی گئی،دونوں رہنمائوں کے درمیان امن و اخوت کیلئے وضع کردہ حکمت عملی کو بہتری اور بہبود کیلئے بروئے کار لانے پر اتفاق کیا گیا جب کہ مواصلات، توانائی، ثقافت، عوامی روابط، تجارت میں اضافے، معیشت اور سرمایہ کاری کے فروغ پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *