“بھارتی قبضے کے تحت کشمیر میں زندگی”

مڈل ایسٹ آئی” اور “بائی لائنز” کے کالم نویس سیجے ورلیمن نے “بھارتی قبضے کے تحت کشمیر میںزندگی” کے عنوان سے ہوش ربا اعداد و شمار پیشکردیئے۔ 

سی جے ورلیمن کی جانب سے اقوام متحدہ کی رپورٹ کے حوالے سے ٹوئٹر پر جاری اعداد و شمار کےمطابق مقبوضہ کشمیر میں ہر 10 کشمیریوں پرایک بھارتی فوجی تعینات ہے۔ 

CJ Werleman
@cjwerleman

#StandwithKashmir

View image on Twitter
معروف کالم نویس نے مقبوضہ وادی میں 6 ہزار سےزیادہ نامعلوم اور اجتماعی قبریں دریافت ہونے کابھی انکشاف کیا ہے۔

سی جے ورلیمن کے مطابق یہ ان لوگوں کی قبریںہیں جنہیں بھارتی فورسز نے غائب کیا تھا۔ اس کےعلاوہ 80 ہزار سے زائد بچے یتیم ہو چکے ہیں۔

ادھر بھارتی عوام بھی مودی کے کشمیر سے متعلق متنازعہ فیصلے کے خلاف آوازیں اٹھانے لگے ہیں۔ سابق فوجی جرنیلوں اور بیوروکریٹس نے ریاست کی خصوصی حیثیت ختم کئے جانے کے خلاف عدالت جانے کا اعلان کر دیاہے۔

مودی حکومت نے کانگرس کے دو کشمیری رہنماؤں کو بھی گرفتار کر لیاہے لکھنو سے کشمیر پر مظاہرے کے لئے جانے سے پہلے سماجی کارکن کو گھر میں نظر بند کر دیا گیاہے۔

بھارتی بشپ نے دنیا بھر کے مسیحیوں سے کشمیر کی حالت زار پر دعا کی اپیل کر دی ہے۔

بھارتی فضائیہ کے سابق ائیر وائس مارشل کپل کاک اور سابق میجر جنرل اشوک مہتا سمیت چھ پٹیشنرز نے کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کئے جانے کو بھارتی سپریم کورٹ میں چیلنج کر دیا ہے۔

اپنی درخواست میں سابق بھارتی فوجیوں اور بیوروکریٹس نے آرٹیکل تین سو ستر کی منسوخی کو کالعدم قرار دئیے جانے کی درخواست کی ہے۔

ادھرمقبوضہ جموں وکشمیر میں سیاسی رہنماؤں کی گرفتاری کا سلسلہ جاری ہے، کانگریس پارٹی کے ترجمان رویندر شرما کو پریس کانفرنس کے دوران حراست میں لے لیا گیا۔

جموں و کشمیر کانگریس کمیٹی کے صدر غلام میر کو بھی قابض افواج نے دفتر جاتے ہوئے حراست میں لیاگیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *