بگٹی قبائل براہمداغ کو مکمل طور پر رد کرتے ہیں اور اس سے لاتعلقی کا اظہار کرتے ہیں

کوئٹہ (نیوزالرٹ) بلوچستان کے علاقے پیرکو میں دپشتگردی کے کو واقعات میں ملوث بے ایل اور بی آر اے جیسی دہشتگرد تنظیموں کو فنڈنگ کرنے والے براہمداغ بُگٹی کے خلاف پیرکو کے علاقے میں زبردست احتجاجی مظاہرہ کیا گیا، جہاں ہر عمر اور ہر مکتبہِ فکر کے لوگوں نے براہمداغ کے خلاف پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے.

مظاہرے کے شرکاء کا کہنا تھا کہ براہمداغ غیرملکی ایجنسیوں کا آلہ کار اور پاکستان و بلوچوں کا سب سے بڑا دشمن ہے، براہمداغ بلوچستان سے باہر بیٹھ کر بلوچستان کی بات کرتا ہے جبکہ اسے بلوچستان کے نہ حالات کا کوئی علم ہے اور نہ ہی کوئی دلچسپی.

براہمداغ مودی کی خوشنودی کو ہی بلوچوں کی خوشی سمجھتا ہے جبکہ ہم بلوچ اور خاص کر بگٹی قبائل براہمداغ کو مکمل طور پر رد کرتے ہیں اور اس سے لاتعلقی کا اظہار کرتے ہیں. براہمداغ بگٹی جو کچھ کہتا اور کرتا ہے وہ براہمداغ کی ذاتی رائے ہے اس سے بلوچوں کا یا بلوچستان کا کوئی تعلق نہیں.
جو شخص ملک سے باہر بیٹھ کر اپنے ہی بلوچوں پر  دھماکے کرواتا ہے وہ یہ بات کیسے کہہ سکتا ہے کہ وہ بلوچوں کے حققوق کا علمبردار ہے.
جلوس کے شرکاء نے ان لوگوں کو بھی واپس آنے اور ملکی دھارے میں شامل ہونے کا پیغام دیا جو براہمداغ بگٹی جیسے ملک فروشوں کے نرغے میں آکر اپنے ہی ملک کے خلاف ہتھیار اٹھائے ہوئے ہیں.
پورے پاکستان کی طرف سے سلام ہے بلوچستان کے غیور بلوچوں کا جنہوں نے ملک دشمن ایجنڈے کو مکمل طور پر رد کردیا اور دشمن کو یہ باور کروادیا کہ بلوچستان پاکستان کا ہے اور پاکستان بلوچستان کا ہے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *