حج کو نفرت آمیز نعروں سے آلودہ نہیں ہونے دیں گے: سعودی عرب

 ریاض (ویب ڈیسک) سعودی عرب کی حکومت نےایک بار پھر باور کرایا ہے کہ حج ایک عظیم اور مقدس عبادت ہے ، اس کی آڑ میں فرقہ وارانہ نعروں اور منافرت پھیلانے والے اقدامات کی کسی صورت میں اجازت نہیں دی جائے گی۔

سعودی عرب کے وزیر برائے مذہبی امور ڈاکٹر عبداللطیف آل الشیخ نے حج کے حوالے سے بات کرتے ہوئے کہ حج عبادت اور مناسک کی ادائی کا نام ہے۔ حج کے موقع پرفرقہ وارانہ نعرہ بازی اور حج کو سیاسی ایجنڈے کے فروغ کے لئے استعمال کرنے کی اجازت ہر گز نہیں دی جائے گی۔

ڈاکٹرآل الشیخ نے مزید کہا کہ حج کی آڑ میں مقدس عبادت کو سیاسی رنگ دینا اللہ کے احکامات کی نافرمانی کے مترادف ہے۔ حج بیت اللہ کا قصد کرنے والے ہر مسلمان پر ان تمام مکروہ افعال سے گریز لازم ہے، جس کے نتیجے میں حج کا اصل مقصد فوت ہونے کا اندیشہ ہو۔

سعودی وزیر مذہبی امور  سے پوچھے گئے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ سعودی حکومت تمام عازمین حج کے ساتھ مساوی سلوک کرنے کی پابند ہے۔ ہمارے نزدیک سعودی باشندے اور دنیا کے دوسرے ملکوں سے آئے اللہ کے مہمان یکساں قابل احترام ہیں۔

ایک اور سوال کے جواب میں آل الشیخ کا کہنا تھا کہ سعودی عرب کے طول وعرض میں 30 ہزار مساجد میں نماز جمعہ کا خطبہ دیا جاتا ہے۔ انہوں نے خطیب حضرات پر زور دیا کہ وہ بہترین تیاری کے ساتھ عوام کی رہ نمائی کا فریضہ انجام دیں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *