جج ویڈیو اسکینڈل: سپریم کورٹ میں سماعت کا آغاز

اسلام آباد (این اے) سپریم کورٹ میں جج ارشد ملک ویڈیو اسکینڈل کی انکوائری کے لئے دائر آئینی درخواست پر سماعت کا آغاز ہو گیا ہے۔

انکوائری کے لیے دائر تین مختلف درخواستوں پر چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں جسٹس شیخ عظمت سعید اور جسٹس عمر عطا بندیال پر مشتمل تین رکنی بینچ کیس کی سماعت کررہے ہیں۔

درخواستیں اشتیاق احمد مرزا،  سہیل اختر اور ایڈوکیٹ طارق اسد نے دائر کی ہیں جس میں وفاقی حکومت، نواز شریف، شہباز شریف، مریم نواز، شاہد خاقان عباسی اور راجہ ظفر الحق کو فریق بنایا گیا ہے۔

درخواستوں میں جج ارشد ملک، ویڈیو کے مرکزی کردار ناصر بٹ اور پیمرا کو بھی فریق بنایا گیا ہے۔

دائر درخواستوں میں استدعا کی گئی ہے کہ سپریم کورٹ لیک شدہ ویڈیو کی انکوائری کا حکم دے اور جج ارشد ملک کی مبینہ ویڈیو کی تحقیقات کیلئے جوڈیشل کمیشن بنایا جائے۔

درخواست میں مؤقف اپنایا گیا ہے کہ عدلیہ کے وقار کو برقرار رکھنے کیلئے ملوث افراد کیخلاف توہین عدالت کی کاروائی کی جائے۔

واضح رہے کہ گزشتہ ہفتے مسلم لیگ (ن) نے احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کی ایک ویڈیو جاری کی تھی جس میں مبینہ طور پر یہ بتایا گیا کہ احتساب عدالت کے جج ارشد ملک نے دباؤ میں آکر سابق وزیر اعظم نواز شریف کو سزا سنائی۔

اس معاملے پر کابینہ اجلاس کے دوران وزیراعظم عمران خان نے کہا تھا کہ اعلیٰ عدلیہ کو اس معاملے کا نوٹس لینا چاہیے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *